کاروبار مغرب تک ختم کرنے کی تجویز پر تاجروں کا ردعمل

فائل فوٹو
فائل فوٹو

 کاروباری سرگرمیاں صبح جلد شروع کر کے مغرب تک ختم کرنے کی حکومتی تجویز پر تاجروں نے ملا جلا ردعمل دیا ہے۔

تاجروں کا کہنا ہے کہ یہ بہت اچھا فیصلہ ہے، اس پر جلد عملدر آمد ہونا چاہیے، قانونِ قدرت سے پیچھے ہٹنا ہی مسائل کی جڑ ہے۔

بعض تاجروں نے کہا کہ شہری خریداری کے لیے آتے ہی 11 12  بجے کے بعد ہیں تو صبح جلد دکانیں کھول کر کیا کریں۔

اسلام آباد، لاہور، پشاور، کراچی اور کوئٹہ سمیت ملک کے بڑے شہروں میں دن 11 بجے تک دکانوں کے شٹر بند دکھائی دیے۔

بڑے شہروں کے مقابلے سندھ کا چھوٹا شہر جیکب آباد بازی لے گیا جہاں پر صبح 9 بجے تمام مارکیٹس کھل گئیں اور گاہکوں کی چہل پہل بھی دکھائی دی۔

پشاور کے ایک دکاندار نے کہا کہ تجارتی مراکز 10 بجے کے بعد کھلتے ہیں، گرمی کی وجہ سے خریداری بھی شام کو ہوتی ہے، مہنگائی اور لوڈشیڈنگ سے کاروبار پہلے ہی خراب ہیں، اگر بازار جلد بند کر دیے گئے تو کاروبار مزید خراب ہو جائے گا۔



اپنی رائے کا اظہار کریں