چیف جسٹس پاکستان قاضی فائز عیسیٰ کا گارڈ آف آنر لینے سے انکار

—فائل فوٹو
—فائل فوٹو

چیف جسٹس پاکستان قاضی فائز عیسیٰ نے گارڈ آف آنر لینے سے انکار کر دیا۔

بطور چیف جسٹس پہلے دن سپریم کورٹ آمد کے موقع پر چیف جسٹس پاکستان قاضی فائز عیسیٰ نے پولیس کو اپنی ذمے داری دل جمعی سے ادا کرنے کی ہدایت کی۔

اسلام آباد پولیس کی جانب سے چیف جسٹس پاکستان کو گارڈ آف آنر پیش کیا جانا تھا۔

اسلام آباد پولیس کی جانب سے سابق چیف جسٹس پاکستان کو گارڈ آف آنر دیا گیا تھا۔

چیف جسٹس پاکستان قاضی فائز عیسیٰ کی سپریم کورٹ آمد کے موقع پر عملے کی جانب سے استقبال کیا گیا۔

اس موقع پر چیف جسٹس پاکستان قاضی فائز عیسیٰ نے عملے سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ آج میری بہت ساری میٹنگز ہیں اور فل کورٹ ہے، آپ سب کا تعاون چاہیے۔

انہوں نے کہا کہ آپ لوگوں سے تفصیلی ملوں گا، لوگ سپریم کورٹ خوشی سے نہیں آتے، لوگ اپنے مسائل ختم کرنے کے لیے سپریم کورٹ آتے ہیں۔

چیف جسٹس پاکستان قاضی فائز عیسیٰ نے کہا کہ آنے والے لوگوں سے مہمان جیسا سلوک کریں، یقیناً کچھ لوگوں کو پریشانی ہوتی ہے۔

انہوں نے سپریم کورٹ کے عملے کو ہدایت کی کہ انصاف کے دروازے کھلے اور ہموار رکھیں، آنے والے لوگوں کی مدد کریں۔

چیف جسٹس پاکستان قاضی فائز عیسیٰ آج بطور چیف جسٹس اپنے پہلے روز بغیر پروٹوکول سپریم کورٹ پہنچے، وہ اپنی ذاتی گاڑی میں عدالت آئے۔



اپنی رائے کا اظہار کریں