چندریان تھری مشن شاید دوبارہ فعال نہ ہوسکے، سابق سربراہ بھائی خلائی ایجنسی

تصویر سوشل میڈیا۔
تصویر سوشل میڈیا۔

بھارتی خلائی ایجنسی کے سابق سربراہ کرن کمار نے کہا ہے کہ چاند پر بھیجے گئے مشن کے دوبارہ فعال ہونے کے امکانات ہر گزرتے گھنٹے کے ساتھ کم ہو رہے ہیں۔ 

برطانوی نشریاتی ادارے سے گفتگو کرتے ہوئے کرن کمار کا کہنا تھا کہ چاند پر منجمد کرنے والے انتہائی کم درجہ حرارت کی وجہ سے مشن شاید دوبارہ فعال نہ ہوسکے۔ چاند کے قطب جنوبی پر رات میں درجہ حرارت منفی 200 سے 250 ڈگری تک گر جاتا ہے۔

کرن کمار نے کہا کہ قمری دن کے اختتام تک مشن فعال کرنے کی کوشش جاری رہے گی۔ 

دریں اثنا برطانوی میڈیا کا کہنا ہے کہ چاند پر ایک دن اور رات کا دورانیہ زمین کے 14 دنوں سے زائد کا ہوتا ہے۔

برطانوی میڈیا کے مطابق بھارتی خلائی ایجنسی نے جمعے کو چندریان تھری سے سگنل نہ ملنےکا بتایا تھا۔ بھارت کا چاند مشن چندریان تھری 23 اگست کو چاند کے جنوبی حصے پر اُترا تھا۔



اپنی رائے کا اظہار کریں